حمد پاک : عبدالمنان طرزی، راولپنڈی، پاکستان



میں بندہ ترا، تو میرا خدا، سبحان اللہ سبحان اللہ
بندے سے خدا کا یہ رشتہ، سبحان اللہ سبحان اللہ

میں حرف دعا تو دست عطا، سبحان اللہ سبحان اللہ
محتاج ہیں تیرے شاہ وگدا، سبحان اللہ سبحان اللہ

بے زار سہی، نادار سہی، بے یار سہی، بیمار سہی
ٹوٹے ہوئے دل کی تو ہے صدا، سبحان اللہ سبحان اللہ

اک تیری رضا، تیری ہی ثنا، ہو پیش نظر جس کے اے خدا
وہ قلب و نظر تو کر دے عطا، سبحان اللہ سبحان اللہ

یہ شمس وقمر، یہ ارض و سما، یہ مٹی پانی اور ہوا
ہیں تیری عطائے بیش بہا، سبحان اللہ سبحان اللہ

اعمال سیہ کا اک دفتر، رحمت پہ تری ہے اپنی نظر
کیا میرے گنہ کیا میری خطا، سبحان اللہ سبحان اللہ

میں مجرم ہوں ستار ہے تو، میں عاصی ہوں غفار ہے تو
لے عیب و گنہ میرے بھی چھپا، سبحان اللہ سبحان اللہ

اول بھی تو ہی، آخر بھی تو ہی، ظاہر بھی توہی، باطن بھی توہی
لاریب ہے تو ہی سب سے بڑا، سبحان اللہ سبحان اللہ

طرزیؔ کے لئے اعزاز بڑا،محتاج کہیں سب اس کو ترا
ہے در سے بندھا تیرے یہ گدا، سبحان اللہ سبحان اللہ


یہ حمد پاک آپ کو کیسی لگی؟ اسے کتنے ستارے دینا چاہیں گے؟