نعت پاک : عظیم انصاری ۔ جگتدل، مغربی بنگال، انڈیا
کتنا بلند و بالا ہے رتبہ رسول کا
عرش بریں پہ ہوتا ہے چرچا رسول کا

لب پر رہے سدا جو و ظیفہ رسول کا
اک روز ہم بھی دیکھیں گے چہرا رسول کا

ہمکو جلائے کیسے بھلا زندگی کی دھوپ
حاصل ہے اپنے سر کو جو سایہ رسول کا

بخشش ہماری ہو کے رہے گی وہاں ضرور
محشر میں ہم جو دیں گے حوالہ رسول کا

واللہ ان کی ذات پہ دوزخ حرام ہے
جن عاشقوں نے دیکھا سراپا رسول کا

ہوگا کبھی نہ غرق گناہوں کی جھیل میں
دین مبارکہ ہے شکارا رسول کا

میری سمجھ میں آتا ہے اتنا ہی بس عظیم
حق کی عبودیت بھی ہے منشا رسول کا

یہ نعت پاک آپ کو کیسی لگی ؟ اسے کتنے ستارے دینا چاہیں گے؟